Health tips

Medicinal use and precautions

Medicinal use and precautions

Medicinal use and precautions

ڈاکٹر کو اپنا دوست سمجھ کر اپنی تمام ترتکالیف اور میڈیکل ہسٹری سے آگاہ کیجئے تاکہ وہ آپ کی بیماری کو بہتر طور پر سمجھ سکے
دوا کی خوراک میں اپنی مرضی سے کمی بیشی آپ کے لیے خطر ناک ثابت ہو سکتی ہے ایسی دوا ہر گزنہ
خرید ئیے جن کے استعمال کی تاریخ گزرچکی ہو
عالیہ پر جب مرگی کا پہلا دورہ پڑا تو اس نے اپنے ڈاکٹر سے مشورہ کیا۔ڈاکٹر نے معمول کے معائنے اور تفتیش کے بعد اسے کچھ گولیاں لکھ دیں اور عالیہ سے کہا کہ وہ اس سے ایک ماہ کے بعد دوبارہ ملاقات کرے۔

جوبات ڈاکٹر نے عالیہ کو نہیں بتائی‘وہ یہ تھی کہ عالیہ کو یہ علاج کئی سال تک کروانا ہو گا۔اس کے بغیر اسے مکمل آرام نہیں مل سکے گا۔عالیہ نے گولیاں استعمال کیں اور وہ اپنے آپ کو بہتر محسوس کرنے لگی ۔

تو پھر غلطی کہاں ہوئی؟
عالیہ اس بات سے مطمئن اور خوش ہو گئی کہ اس کی بیماری غائب ہو چکی ہے اور وہ بالکل ٹھیک ٹھاک ہے ۔
ڈاکٹر کے پاس سے آنے کے بعد ایک ماہ تک وہ پابندی سے دوا کا استعمال کرتی رہی اور پھر اس نے دوابند کر دی اور وہ ڈاکٹر کے پاس بھی نہیں گئی ۔

اس کا نتیجہ کیا نکلا؟اس پر دوبارہ دورہ پڑ گیا۔یہ تو محض ایک مثال ہے ۔ہو سکتا ہے کہ آپ ایک مریض کو حیثیت سے ‘پہلے کبھی اس قسم کے تجربے سے گزرے ہوں اور آپ کو اس بات پر تعجب ہوا ہو کہ دوانے اثر کیوں نہیں دکھایا۔
اس وقت کیا ہوتا ہے جب علاج سے مطلوبہ نتائج حاصل نہیں ہوتے؟اس کے نتیجے میں بہت سے اثرات مابعد‘یعنی ری ایکشنز نمودار ہوتے ہیں ۔مایوسی‘غصہ اور ناامیدی ۔اس کے بعد مریض بار بار ڈاکٹر تبدیل کرتا ہے یا اپنے ڈاکٹر کو نااہل قرار دیتا ہے اور ان سب چیزوں کے باوجود جب پھر بھی کوئی افاقہ نہیں ہوتا تو پھر وہ اپنی اس تکلیف کو تقدیر کا لکھا سمجھ کر قبول کر لیتا ہے ۔

ہندوستان جیسے بہت بڑے ملک میں جہاں کی آبادی ایک ارب سے زیادہ ہے ہر ساڑھے تین ہزار افراد کے لئے ایک ڈاکٹر موجود ہے ۔ظاہر ہے یہ تناسب بہت کم ہے ۔اس کے باعث ڈاکٹروں پر کام کا بہت زیادہ بوجھ ہے اور وقت کی کمی ہے ۔اس لئے ڈاکٹروں کے لئے یہ ناممکن ہے کہ و ہ اپنے مریضوں کو ان کی بیماری کے سلسلے میں پوری تفصیل کے ساتھ بتاسکے اور اس بارے میں ان کو تعلیم دے سکے ۔پاکستان میں بھی صورت حال کچھ اس سے زیادہ مختلف نہیں ہے۔یہاں بھی ڈاکٹر وں کے پاس اتنا وقت نہیں ہوتا کہ وہ ایک ایک مریض کو پوری تفصیل کے ساتھ اس کی بیماری اور علاج کی تفصیلات وغیرہ کے بارے میں آگاہ کر سکیں۔

دواؤں کو ‘خواہ وہ قدرتی ذرائع سے حاصل کردہ ہوں یا مصنوعی طریقے سے تیار کردہ ‘ہمیشہ نہایت احتیاط کیساتھ استعمال کیا جانا چاہئے۔چونکہ دواسے متاثر ہونے والا مریض ہی ہوتا ہے ۔اس لئے مریض کے لئے ضروری ہے کہ وہ جو دوااستعمال کررہا ہے یا کرنے والا ہے اس کے بارے میں وہ جانے ‘اس کے خواص کے بارے میں آگاہی حاصل کرے اور اپنی بیماری کے بارے میں بھی اچھی طرح جانے۔
تو پھر‘اس کام کا آغاز کس طرح اور کہاں سے کیا جانا چاہئے؟
آپ ڈاکٹر کے پاس جانے سے اس کا آغاز کیجئے ڈاکٹر آپ کا دوست ہے ‘اس پر اعتماد کیجئے۔اس سے کوئی بھی بات چھپا نا‘خواہ وہ بظاہر کتنی ہی غیر اہم کیوں نہ معلوم ہوتی ہو‘آپ کے لئے سنگین نتائج کی حامل ہو سکتی ہے ۔ڈاکٹر کو اپنی تکالیف کے بارے میں کھل کر بتائیے۔

ڈاکٹر کو اپنی گزشتہ اور موجودہ بیماریوں کے بارے میں تاریخ وار بالکل صحیح صحیح معلومات فراہم کیجئے۔ڈاکٹر کو پورے طور سے یہ بتائیے کہ آپ کون کون سی دوائیں استعمال کرتی رہی ہیں۔وہ دوائیں کتنی موثر ثابت ہوئیں‘آپ نے ان دواؤں کا استعمال کب ترک کیا اور ان کی متبادل کون سی دوسری دواؤں کااستعمال کب سے شروع کیا۔
ڈاکٹر کو یہ بتائیے کہ آپ اس وقت کون سی دوائیں استعمال کررہی ہیں۔ اگر آپ کسی الرجی کا شکار ہیں تو اس کے بارے میں بتائیے۔ڈاکٹر کو ہمیشہ اپنی بالکل صحیح عمر بتائیے‘چونکہ دواؤں کی خوراک کا عمر سے گہرا تعلق ہوتا ہے ۔نوزائیدہ بچوں‘بالغوں اور بڑی عمر کے لوگوں کے لئے دوا کی خوراکیں الگ الگ ہوتی ہیں۔
ڈاکٹر کو یہ بتانا ہر گزنہ بھولئے کہ آیا آپ کوئی وٹامنز استعمال کررہی ہیں یا کوئی ہومیو پیتھک یا یونانی دوالے رہی ہیں ۔جڑی بوٹی سے تیار ہونے والی بعض دواؤں کے بارے میں ‘جوکہ بظاہر بالکل بے ضرر سمجھی جاتی ہیں ‘یہ معلوم ہوا ہے کہ ان کی وجہ سے بلڈ پریشر میں اور دل کی دھڑکن یعنی ہارٹ بیٹ میں تبدیلیاں پیداہوئیں ۔

:متبادل دوا

بعض مریض ڈاکٹر سے یہ تک نہیں پوچھتے کہ ان کا اصل مسئلہ کیا ہے ۔یہ روش غلط ہے ۔اپنی بیماری کے بارے میں تفصیلات معلوم کیجئے۔ڈاکٹر سے پوچھئے کہ آپ کو کتنے عرصے تک علاج کروانا پڑے گا۔یہ عرصہ طویل ہوگا یا مختصر ہو گا۔ڈاکٹر سے پوچھئے کہ آیا آپ کی بیماری مکمل طور پر ختم ہو جائے گی یا یہ شفا محض عارضی ہو گی ‘اور یہ کہ آیا سرجری کی ضرورت ہوگی۔

ڈاکٹر نسخے پر جو دوالکھ کر دے‘اس کی بالکل صحیح صحیح اسپیلنگ ‘یعنی املا معلوم کیجئے۔اگر آپ خود ٹھیک سے نہ پڑھ سکیں کہ ڈاکٹر نے کیا لکھا ہے تو ڈاکٹر سے پوچھنے میں ہچکچاہٹ سے کام مت لیجئے۔یہ مت سمجھئے کہ اس سے آپ کی پڑھنے کی صلاحیت پر حرف آتا ہے ۔بلکہ اس کے بجائے آپ خطرے سے محفوط ہو جائیں گی کہ کیمسٹ آپ کو کوئی غلط دو ادے دے۔

دواکس شکل میں تجویز کی گئی ہے ؟یہ ٹکیہ یا گولی ہے ‘کیپسول ہے ‘پاؤڈر ہے ‘مرہم ہے ‘شربت ہے یا انجکشن ہے ۔اگر یہ انجکشن ہے تو اس امر کو یقینی بنائیے کہ صرف ایک بالکل نئی ڈسپوز یبل سرنج ہی استعمال کی جائے ۔بعض دوائیں صرف بیرونی استعمال کے لئے ہوتی ہیں اور انہیں کھایا نہیں جاتا۔عام طور سے دواؤں کے ساتھ ان کا لٹریچر موجود ہوتا ہے جس میں ان کے بارے میں تفصیلات درج ہوتی ہیں ۔
دواؤں کو استعمال کرنے سے پہلے ان کے لٹر یچر کا بغور مطالعہ کیجئے۔
کیا لینا چاہئے؟

دوا کی صحیح خوراک اور اس کو لینے کا صحیح وقت کیا ہے ؟صبح’دوپہر اور رات کو سوتے وقت کتنی گولیاں استعمال کرنی ہیں؟
آپ کو یہ بھی جاننا چاہئے کہ آپ کو دواخالی پیٹ لینی ہے ‘کھانے سے پہلے لینی ہے یا کھانے کے بعد لینی ہے ۔یہ بھی جاننا چاہئے کہ گولی کو پورا نگل لینا ہے یا اسے آہستہ آہستہ چوسنا ہے‘یہ کہ اگر آپ گولی کومنہ میں توڑ دیں تو کیا اس سے دوا کے اثر میں کوئی کمی بیشی واقعی ہوگی۔

فرض کیجئے کہ آپ بہتر محسوس کرنے لگتی ہیں تو اس صورت میں آپ کیا کریں گی ؟کیا آپ کو دوا کا استعمال ترک کر دینا چاہئے یا آپ کو ڈاکٹر کا تجویز کردہ کورس پورا کرنا چاہئے۔

دوائیں انسانی جسم پر بہت سارے اثرات مرتب کرتی ہیں۔ اچھے اثرات مرض کے علاج کے لئے ضروری ہوتے ہیں ۔تاہم خراب اثرات مابعد بعض اوقات تکلیف دہ بن جاتے ہیں۔ وہ ازخود ختم نہیں ہوتے اور مریض کے لئے پریشانی کا باعث بنتے ہیں ۔اب معلوم کیجئے کہ یہ مضر اثرات کیا ہیں اور اگر وہ پیدا ہوتے ہیں تو ان کو دور کرنے کے لئے کیا کرنا چاہئے۔
اگر آپ دویادو سے زائد دوائیں ایک ساتھ لے رہی ہیں تو اس بات کا امکان ہو سکتا ہے کہ وہ دونوں ایک دوسرے پر اثر ڈالیں ‘ان کے انفرادی خواص میں کمی واقعی ہو جائے یا وہ مضر اثرات پیدا کریں ۔اس چیز کو”دوا کاتفاعل“(ڈرنگ انٹر ایکشن)کہتے ہیں ۔اس سے بچنے کے لئے بہترین راستہ یہ ہے کہ آپ اپنی دواؤں میں وقفہ رکھیں۔

اپنے ڈاکٹر سے غذا کے بارے میں ہدایات حاصل کیجئے۔مثال کے طور پر جو مریض ہائی بلڈ پریشر کا شکار ہوں ‘انہیں اپنے کھانوں میں نمک کی مقدار کم رکھنی چاہئے۔اگر آپ کو خدانخواستہ کسی نشے کی عادت ہے تو اس کے بارے میں اپنے ڈاکٹر کو ضرور بتائیے۔
کیا دواؤں کے استعمال کا اثر آپ کے کام پر بھی پڑ سکتا ہے ؟کیا دواؤں کے نتیجے میں اضمحلالی کیفیت اور نیند کا غلبہ پیدا ہو گا؟کیا گاڑی چلانا اور تیرا کی کرنا صحیح ہو گا یا اس قسم کی سرگرمیوں کو روک دیا جانا چاہئے؟یہ ایک بہت اہم سوال ہے ۔
بعض دوائیں ایسی ہوتی ہیں جنہیں حمل کے دوران یا بچے کو ماں کا دودھ پلانے کے دوران استعمال نہیں کیا جانا چاہئے کیونکہ وہ بچے کو متاثر کر سکتی ہیں ۔نیز بعض دواؤں کو گلا کو ما‘یعنی کا لا پانی ‘دمہ اور پیپٹک السر کے مریضوں کو بھی استعمال نہیں کرنا چاہئے ۔چنانچہ آپ کے لئے ضروری ہے کہ آپ اپنے ڈاکٹر کو اپنی بالکل صحیح میڈیکل ہسٹری سے آگاہ کریں ۔

اس امر کو یقینی بنائے کہ کیمسٹ آپ کو بالکل صحیح دوا دے رہا ہے ۔خریدی ہوئی دوا کو ڈاکٹر کے لکھے ہوئے نسخے سے ملا کر دیکھئے ۔اگر ڈاکٹر کی لکھی ہوئی دوابازار میں دستیاب نہیں ہے‘ تو اس کے متبادل کے لئے ڈاکٹر سے پوچھئے‘ کیمسٹ سے نہیں ۔
دواخریدتے وقت اس کی ایکسپائری (ختم ہونے )کی تاریخ لازمی طور پر دیکھئے اور ایسی دوا ہر گزنہ خریدئیے جس کے استعمال کی تاریخ گزرچکی ہو‘خواہ وہ آپ کو کم قیمت پر ہی کیوں نہ دستیاب ہو۔

گھر پر دواؤں کو احتیاط کے ساتھ رکھنا بھی یکساں اہمیت کا حامل ہے ۔دواؤں کو گرمی اور روشنی سے بچا کر رکھئے ۔بچوں کوگولیوں اور کیپسولوں کے تیز اورروشن رنگ بہت اچھے لگتے ہیں اور وہ انہیں مٹھائی کی گولیاں سمجھ کر کھا جاتے ہیں۔
چنانچہ الماری میں دواؤں کے خانے کو ہمیشہ مقفل رکھئے تاکہ بچوں کی وہاں تک رسائی نہ ہوسکے۔رکھی ہوئی دواؤں کا برابر جائزہ لیتی رہئے اور ایسی دوائیں فوراً ضائع کردیجئے جن کے رنگ میں فرق پیدا ہو چکا ہو یا جن کی ایکسپائری کی تاریخ گز ر چکی ہو۔
دوا کی خوراک میں اپنی مرضی سے کوئی تبدیلی مت کیجئے اورنہ ہی اپنا بیماری کی شدت کے لحاظ سے اس میں از خود کوئی کمی بیشی کیجئے ۔یہ کام آپ کا نہیں ڈاکٹر کا ہے ۔
جو دوائیں آپ خود استعمال کررہی ہیں ان کو استعمال کرنے کا مشورہ دوسروں کو مت دیجئے اور نہ ہی دوسروں کی بتائی ہوئی دواؤں کو اس بنا پر خود استعمال کیجئے کہ وہ لوگ بھی ایسی ہی تکالیف کا شکار تھے اور انہیں ان دواؤں سے فائدہ پہنچا ہر شخص ایک دوسرے سے مختلف ہوتا ہے اور جو چیز کسی ایک شخص کے لئے فائدہ مند ہوتی ہے۔وہ ضروری نہیں کہ دوسروں کیلئے بھی فائدہ مند ہو۔ایک اور اہم مسئلہ جس کا آپ کو اکثر وبیشتر سامنا کرنا پڑتا ہے ‘ویہ ہے کہ آپ یہ بھول جاتی ہیں کہ آپ نے دوا کی خوراک کھالی ہے یا نہیں۔

اس مسئلے سے نمٹنے کے لئے بہتر ہو گاکہ آپ لکھ لیا کریں کہ آپ نے کون سی دوا لے لی ہے ۔یا پھر یوں کیجئے کہ آپ کو جو دوائیں روزانہ لینی ہوں ان کی مطلوبہ خوراک کے چھوٹے چھوٹے پیکٹ بنالیجئے اوریہ پیکٹ شفاف پلاسٹک کی چھوٹی چھوٹی تھیلیوں کے ہونے چاہئیں ۔اس طرح آپ کو علم رہے گا کہ اپ نے کون سی دوا اور کتنی مقدار میں استعمال کرلی ہے آپ کو ایک ذمہ دار اور باخبر مریض ہونا چاہئے۔یہ جسم آپ کا اپنا ہی تو ہے جس کا آپ کو خیال رکھنا ہے ۔

Understanding the doctor as your friend, be aware of all your health and medical history so that they can better understand your illness.
Your diet deficiency in the diet can prove to be dangerous for you, every medicine Medicinal use and precautions

Buy the date you’ve been using
When the first visit to chicken was first, he advised his doctor. The doctor wrote some tablets after the general inspection and investigation and told him that he should meet again after one month.

The doctor did not tell the doctor that he had to treat the treatment for the last few years. Without this, he would not be able to get full comfort. The recent use of tablets and he started feeling better.
Where did the mistake happen?

Alan was satisfied and pleased that her illness has disappeared and she is absolutely fine. Medicinal use and precautions
After the doctor came from a month, he used to use the medicine for a ban and then he repented and he did not even go to the doctor.

What is the result of this? It has been re-visited. It is just an example. Maybe you have passed as a patient as “a formerly experienced experience and you are surprised that Why did not the medicine affect?

What happens when treatment does not get the desired results? As a result, many effects show different reactions.
Disappointment and disappointment .After this, the patient repeatedly changes the doctor or disables his doctor, and despite all these things, even if he does not have any affection, then he accepts his pain as understood by the fate Does it
In a large country like India, where a population is more than one billion, there is a doctor for every and every three and a half thousand people.

It is obvious that this proportion is very low. Due to this, doctors have a lot of work and lack of time. For doctors, it is impossible to tell their patients about their illness in full detail. And they could teach them about this. Even in Pakistan, the situation is not much different from this. Even then doctors do not have enough time to explain the details of their disease and treatment with one patient. And so on.

The medicines should be used ‘whether they have been obtained from natural sources or artificially created’ with a very careful caution. Because the patient is an infectious patient, therefore, the patient is required to use the medicine Or who is going to get to know about it, knowing about her needs and going well about her illness. Medicinal use and precautions

Then how should this work start and where?
You start it with your doctor, doctor is your friend. Trust him. Nothing hidden from him, though, why he does not seem to be unnecessary.  Medicinal use and precautions ‘ You can tell the doctor about your pain.
Give the doctor the correct correct information about your past and present illnesses.

Tell the doctor completely what medicines you are using. How effective those medicines were? ‘When did you stop using these medicines, and when you start using other medicinal alternatives.
Tell the doctor what medicines you are currently using. If you are an idiot, tell it about it.

Always tell the doctor exactly what he says, because medicine is deeper than the age of the newborn .Children ” Medicines’ foods are different for the elderly and older people.

To explain to the doctor, forget each of the lessons whether you are using vitamins or a homogenic or Greek phosphorus. Some medicines that are manufactured from herbs are “which are considered to be absolutely harmless”.  Medicinal use and precautions They have changes in blood pressure and heart beat or heart bet. Medicinal use and precautions

Alternative medicine:

Some patients do not ask the doctor to know what their real problem is. This method is wrong. Find out the details about your illness. Ask the doctor how long you have to be treated. This period will be long or short Ask the doctor if your disease will end completely or it will only be temporary ‘and that surgery will be needed.

Find out exactly what’s right on the doctor’s prescription’s ‘right spelling’. If you do not properly read what the doctor has written, do not hesitate to ask your doctor. Do not think it Your vocabulary comes with a vocabulary. Instead, you will be in danger of cautious that chemistry gives you a wrong pay.

Recommended in Davis format? It is a pillow or tablet that has ‘capsules’ powder is ‘omegawatt’ or is injection .If it is injection, make sure that only one new discipline is used as a syrup syringe. Some other medications are for external use only and they are not eaten. They usually contain their literature with medicines, which include details about them.

Before using medicines, study their Litter Yuree.
What should I take?
What is the right time to take the right medicine and take it? In the morning, how many bills are to be used in the morning and evening?

You should also know that you have to take a stomach stomach ‘have to eat before eating or after eating. It should also be known that the tablet is to swallow or it is a ghee.

Slow to suck slowly, ‘If you break the tablet into a spoon, will it have a decline in the effect of drug?

Suppose you feel better, what will you do if you feel better? Should you use the medicine to be abandoned or you should complete the doctor’s recommended course.

Medicines have many effects on human body. Good effects are necessary for the treatment of the disease. Such bad effects sometimes become painful. They are not overwhelmed and cause problems for the patient. Medicinal use and precautions
Now find out what these hazardous effects and if they are born then what should be done to overcome them. Medicinal use and precautions
If you are taking more medicines than duplex together, it may be possible that they both affect each other ‘their individual characteristics are really lacking or they produce adverse effects. ” “(Durgin Inter Action).

The best way to avoid this is that you keep your medication interval.
Get directions from your doctor to diet. As a patient, who suffer from high blood pressure, they should keep the amount of salt in their own food. If you have a habit of eating a drug, then think about it. Tell the doctor.

Can the effects of medicinal use affect your work also? Will medication result in domination and sleeping? Will it be right to drive and do what is right? Or activities like this should be stopped. This is a very important question.

There are some medicines that should not be used during pregnancy or breastfeeding of the baby because they can affect the baby. Some medicinal medicines can be used as ‘water water’ asthma and peptic ulcer. Patient should not be used even though. However, you need to inform your doctor about the medical history of your doctor. Medicinal use and precautions

Ensure that chemist is giving you the right medicine. See the raw medicine mixed with the doctor’s written prescription. If the doctor is not available in the doctor’s doctor, then ask the doctor for his replacement. ‘Not chemist.
See the date of expiration (expiration) on medication, and buy any medicine that has been used to date, why it is not available to you at a lower cost.

It is equally important to keep medicines at home equally important .After heat and light, the sharp and aerial colors of patches and capsules look very good and they eat them as sweets table.
So keep the medicines in the wardrobe always locked so that the children can not reach there. Take the same medication as well, and get rid of such medicines that have become a difference in the color or the expiry date. Have you got it?

Do not make any changes in the diet of your medicine and share it with yourself as a result of your illness. This work is not your doctor.
Do not advise others to use the medicines that you are using them, nor do others use the medications given to them as they were suffering from such problems and they benefited from these medicines. The person is different from each other and what is beneficial for one person.

It is not necessary that others are also beneficial for others. Another important problem that you often encountered is, ‘Do you forget whether you have dose of food or not?’ Medicinal use and precautions

It is better to cope with the problem that you should write which medicine you have taken. Then let’s make the small doses of the desired foods that you need to take daily. It should be of small bags .You will be aware that what medication and how much use you use should be a responsible and well-informed patient. This body is your own, which you consider Have to keep. Medicinal use and precautions

sourceUrduPoint.com.

Tags

Related Articles

2 Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
error

Enjoy this blog? Please spread the word :)

Follow by Email
Facebook
Facebook
Twitter
Close
Close