Joint Pain & Arthritis

Joron K Mareezon K Liay Khushkhabri

Joron K Mareezon K Liay Khushkhabri

Joron K Mareezon K Liay Khushkhabri

سائنسدانوں نے جوڑوں کے مریضوں کے لیے مصنوعی انگوٹھے پر مشتمل جوڑ تیار کیا ہے جس سے ان کے ہاتھوں کے درد میں افاقہ ہوگا۔ میزائل کی ناک کی تیار میں استعمال ہونے والا الٹرالائٹ پائیر ولائٹک کاربن یا عرف عام میں کاربن فائبر کہلانے والے اس میٹریل سے تیار کردہ چھوٹے سکے کے سائنر کا یہ انگوٹھا اسٹیل سے بھی 5 گناسخت ہوگا۔ اس ضمن میں جوڑوں کے 600 مریضوں پر جب یہ تجربہ کیا گیا تو اس کے نتائج 98 فیصد نکلے یہ جوڑ ان مریضوں کو ہاتھ میں ہونے والی رگڑ سے پہنچنے والے درد کا بہترین علاج ہے ۔

تجربے میں شامل رضا کاروں کے مطابق اس جوڑ سے انہیں روز مرہ کے کام کرنے میں آسانی ہوگئی ہے ۔ اس جوڑ کی تنصیب میں ایک گھنٹے سے بھی کم وقت لگتا ہے اور اسے انگوٹھے کی جڑ پر لگایا جاتا ہے جس کے بعد جوڑ آپس میں رگڑنا چھوڑدیتے ہیں ۔ دیکھا گیا ہے کہ انگوٹھے کا جوڑ زیادہ عمر میں بہت تکلیف دینے لگتا ہے اور روز مرہ کے چھوٹے چھوٹے کام بھی کرنا دشوار ہوجاتا ہے ایسے میں ایک سینٹی میٹر کی یہ ڈسک بہت سی تکلیف سے نجات دے دے گی ۔ ڈسک لگانے کے 3ماہ بعد ہاتھ مکمل طور پر صحیح ہوچکا ہوگا۔

Scientists have developed a pair of synthetic thumbs for patients of pediatricians, which will help in the pain of their hands. Used in the manufacture of missile nose, this ring of small coin produced from this metallel called carbon fiber in ultra-thin piercing white carbon or alias commonly will be 5 counts. In this case, when combined with 600 patients of joint joints, the results out of 98 percent, these patients have the best treatment for those patients suffering from friction.

According to the volunteer experience, this pair has easily been able to do everyday tasks. This pair installation takes less than an hour and is placed on the thumb root, after which the pair leaves rubbing each other. It has been observed that the thumb pair seems to be very painful at the age of time, and it is difficult to make daily tasks even worse, in such a case of a cm will save from many discomfort. After 3 months of handling, the hand must have been perfectly valid.

sourceUrduPoint.com.

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
Close
Close