Joint Pain & Arthritis

Jooron Ka Dard

Jooron Ka Dard

Jooron Ka Dard

:وجح المفاصل

یہ بچوں اور نو عمر لوگوں کی بیماری ہے اور عموماً پانچ سے پندرہ برس تک کی عمر میں ہوتی ہے کسی جوڑ میں اچانک اور بغیر کسی وجہ کے تھکاوٹ یا چوٹ وغیرہ کے درد ہونے لگتا ہے جوڑ میں ورم آجاتا ہے اور یہ سخت ہوجاتا ہے کبھی کبھی جوڑوں کے درد سے کچھ دن پہلے مریض تھکاوٹ اور نفاہت محسوس کرنے لگتا ہے جس کا بظاہر کوئی خاص سبب نہیں ہوتا اس کے ساتھ ہی مریض کو تیز بخار ہوجاتا ہے بہت زیادہ پسینہ آتا ہے اور عموماً بھوک کی کمی اور قبض کی شکایت بھی رہتی ہے مریض کا دل بہت زور زور سے اور زیادہ تیز رفتار سے دھڑکتا ہے زیادہ تر جسم کے بڑے جوڑ کلائی،کہنی،کندھا،ٹخنے،گھٹنا وغیرہ اس بیماری کا شکار ہوتے ہیں جب بیماری شدت اختیار کرتی ہے تو متاثرہ جوڑ اور زیادہ سوج جاتا ہے لیکن اب یہ چھونے سے نرم لگتا ہے درد میں مزید اضافہ ہوجاتا ہے یہ بیماری عموماً خزاں یا بہار کے موسم میں ہوتی ہے اور جدید طبی تحقیق کے مطابق اس کا اصل سبب گلے کی معمولی سی خرابی ہوتی ہے گلا تو ٹھیک ہوجاتا ہے لیکن ان کا چھوڑا ہوا زہر الرجی پیدا کرتا ہے اور مریض جوڑوں کی اس خطرناک بیماری میں مبتلا ہوجاتا ہے یہ بیماری عموماً غریب گھرانوں میں ہوتی ہے جہاں غذا کا معیار اچھا نہیں ہوتا افراد کمزور ہوتے ہیں اور تنگ گندے اور نمدار مکانوں میں رہتے ہیں۔

:علاج

بستر میں مکمل آرام اشد ضروری ہے حتیٰ کہ مریض کو رفع حاجت کے لیے بھی بستر چھوڑنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی مکمل آرام اس وقت تک لازمی ہے جب تک کہ بخار نہ اتر جائے جوڑوں کا درد اور ورم نہ جاتا رہے اور دل کی دھڑکن معمولی پر نہ آجائے صحت یاب ہوتے ہی کوئی محنت طلب کام کرنا شروع نہ کردیں بلکہ رفتہ رفتہ روزمرہ کے معمولات کی طرف آئیں متاثرہ جوڑ کو بالکل حرکت نہ دیں جوڑ کو ساکت رکھنے کے لئے آپ اس پر روئی کی تہہ رکھ کر پٹی باندھ سکتے ہیں بازار سے سپلنٹ Splint یعنی لکڑی کی پتلی پتلی پھٹیاں لے کر باندھنا اور بھی زیادہ مفید ہے جوڑ کی مالش ہرگز نہ کریں شیر گرم پانی میں بھگویا ہوا تولیہ بھی درد کو کم کرتا ہے لیکن زیادہ گرم ٹکور نقصان دہ ثابت ہوتی ہے مریض کو اس پہلو پر لیٹنا چاہیے جس پر وہ زیادہ آرام محسوس کرتا ہو بھوک کی کمی اورقبض کا مناسب علاج کریں اور مریض کو متوازن غذا دیں اگر پسینہ زیادہ آتا ہو تو گاہے گاہے تولیے یا اسفنج سے پسینہ پونچھتے رہیں پسینے میں نمک کی کثیر مقدار ضائع ہوجاتی ہے اس لیے مریض کو پینے کے لیے نمکین پانی دیں اسپرین اس بیماری کا بہترین علاج ہے اسپرین نہ صرف درد کو اور ورم کو کم کرتی ہے بلکہ اس بیماری کی جڑیں اکھاڑنے میں مدد دیتی ہے پہلے دو دن اسپرو کی تین گولیاں دو دو گھنٹے بعد استعمال کریں اور اس کے بعد جوڑ ٹھیک ہوجانے تک تین گولیاں ہر چارگھنٹے بعد کھاتے رہیں سوتے وقت چونکہ ایک خوراک کا وقت ضائع ہوجاتا ہے اس لیے رات کو پانچ یا چھ گولیاں کھاکر سوئیں بعض اوقات مکمل آرام پانے کے لیے کئی کئی گولیاں کھانی پڑتی ہے اگر اسپرین سے آپ کا جی متلاتا ہو یا قے آنے لگتی ہو یا غنودگی یا سر چکرانے کی شکایت پیدا ہو تو اسپرین دودھ کے ساتھ استعمال کریں اگر پھر بھی یہ موافق نہ آئے توکیلشیم اسپرین کھائیں اگر یہ بھی ناقابل برداشت ہو تو ڈاکٹر سے مشورہ کریںبڑوں کی نسبت بچوں کو اسپرین زیادہ راس آتی ہے بیماری کے آغاز میں پنسلین کے آٹھ دس انجکشن لگوائے جانے چاہییں یہ جراثیم کی قلع قمع کرکے بیماری کے مزید حملوں سے محفوظ رکھتے ہیں یہ ایک خطرناک بیماری ہے جوڑوں کی تکلیف کے علاوہ یہ دل کو مسلسل کھائے چلی جاتی ہے لہٰذا اس سے جتنی جلدی نجات مل سکے اتنا ہی اچھا ہے اگر گھریلو علاج زیادہ موثر نہ ہوں تو جلد از جلد ڈاکٹر سے مشورہ کریں یا د رکھے مکمل آرام پانے میں عموماً ڈیڑھ سے چھ مہینے تک کا عرصہ لگ جاتا ہے ڈاکٹر سے علاج کے دوران بھی احتیاطی تدابیر اور مریض کی دیکھ بھال اس بیماری سے جلد نجات حاصل کرنے میں مدد دیں گی

Vijah al-Hafsa:

It is a disease of children and adolescents, and usually occurs between five to fifteen years, a couple suddenly starts to suffer from fatigue or injury due to sudden and without reason. Occasionally, a patient may feel tired and discomfort a few days prior to joint pain, which apparently does not cause any special reason, as well as the patient feeds fast, it is very sweat and usually decreases the hunger and occupation of the patient. The complaint also keeps the patient’s heart beaten in a loud and sharp, most of the body’s big pair wrist, elbow, shoulder, tear, knee Other diseases occur in the disease when the disease intensifies, the affected pair gets more sue, but now touching it makes it more painful in the disease. This disease usually occurs in the autumn or spring season and the modern medical research According to this, the main cause of the throat is the slightest stroke, but the poison is allergic, and the patient creates all the risk of joining the disease, the disease is usually in poor households where food The quality is not good, people are weaker and live in dirty and humble houses. Jooron Ka Dard

Treatment:

Absolute relaxation in the bed is essential, as well as the patient can not be allowed to leave the bed for remnants, as well as complete rest until it feels unhealthy and uncomfortable. If you do not want to do it, you can not do it, but you do not have to worry about it. Split splint from the market – to tie it with thin thin skins and even more useful. Do not sprout the pair. Lion is hot in hot water. Wired towel also reduces the pain, but the more hot pieces prove to be harmful, the patient should lie on this aspect, which feels more relaxing, reduce hunger and treat proper treatment and provide patient food balanced if sweat more If you come, sweat with a towel or asphan, sweat, the amount of salt is lost, so the patient should give the salt water to drink. Aspirin is the best remedies of this disease, aspirin not only reduces pain and vomiting. This disease helps to sprinkle the first two days, use three tablets of spray two or two hours later. After eating two tablets after eating four times each time a dose is lost, so take five or six tablets in the night, and sometimes there is a lot of tablets to eat full comfort, Jooron Ka Dard  if you have a spoon. If you become pregnant or become depressed or decreased or have dizziness or headache, use sprayed milk with sugar, if it still does not agree, eat coconut sprayed if it is unbearable, consult the doctor. It is more painful that eight pseudocalins of penciline should be applied at the beginning of the disease. The fortresses protect the disease from further attacks. It is a dangerous disease, except for the pain of joints, this heart is constantly eaten, so it is better to get relief as soon as possible if domestic remedies are not more efficient. As soon as possible consult the doctor or take full rest of it, it usually takes a period of six to six months. During the treatment, the doctor will also help prevent care and patient care from getting rid of this disease.

sourceUrduPoint.com.

Tags

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
Close
Close