Health Articles

Eat green seafood

Eat green seafood

Eat green seafood

The taste of seafood (SEAWEED) is not so couch, but it is like a little fish. It is called seafood. It is considered nutritious food. Scissors believe that if this diet is eaten more It helps to end the effects of climate change. If you eat seafood, the region will save the earth, because in this way vegetables and meat will reduce.

If you like Japanese dishes, Sushi (SUSHI) killings, it means that you already have a well-known Kihei type, which is Nori (NORI). Almost black orphans should say that it is deeper green.
It is dry and long pieces are cut off. They are then wrapped on a swallow or fish killings.

It is also used in soup and other nutrients. It is necessary to be cautious during eating because thirsty take plenty of food when it is dry and drinking water does not reduce the water in the body.
It is also used as salt in Japanese foods. One piece of it that is almost equivalent to a sushi roll, has 13 cALORIES.
Soon, the ocean kay was likely to be widely used as a result, because it has been consumed in China, Japan and Korea for thousands of years. Its more than ten thousand types are available.
KALE is counted in useful nutrients. First, health has declared it very nutritious. It is a kind of cabbage. Apart from this, green marine kitchens are now in the market.
It contains diabetes (protein), fiber and folic acid. All kinds of seafood contain special amounts of minerals, including copper, ozone, fielded and calcium. “(K) is also a suitable amount. This animal is found in spinach and vegetable. The bones are maintained by the” c “, and it produces such a feature in the body that the wound becomes moisturized. Are there
This helps in the birth of four of the thirteen, which is ending blood tissues in the brain.
In addition, it also has a substance called “FUCOIDANS”, which is longer than that. This is the secret of long-term religions. This will increase your strength, increase the risk of disease-causing diseases. Prevents and increases age.

Health Updates

Seafood should eat moderately, but if you eat more, then the amount of ozone will also arrive in the body because it contains ozone. Like fish, it may include environmental pollution, For example, CADMIUM and NIC ARSE, which damage your liver and liquor, it will be better if you go to the seafood and try not to extract and cook it, but also a company Eats a cooked dish.
The company’s Kai laboratory is tested and it does not have hazardous health.
Seafood and earth
How can we keep the kayak in our daily diet and keep our loved ones, i.e. safeguards the earth? This kai likes to eat the seafood much more, but if we eat it too, what is the problem? Recently research It proves that we should eat with a strong diet.
Statistics have shown that the population of the world will reach 7 billion from 30 million to 9 billion 80 million by 2050. At this time, food shortage can occur for humans, because there is no agricultural potential in 24 billion tonnes now that they could produce so many masses. As far as sea life is concerned, we have finished collecting about 90 percent of fishes from the oceans of the world.

Where can you get Kai?
Dry sea kai is available as many restaurants in Korea and Japan are available in Pakistan .While foreign products are found in other markets, if you ask for dry sea kai or nori kai, you will also find them. You can eat strawberry or with different flavored things.

Eat green seafood

سمندری کائی(SEAWEED)کا ذائقہ سوفیصد تو نہیں،لیکن تھوڑا بہت مچھلی جیسا ہوتا ہے ۔یہ سمندری غذا کہلاتی ہے۔یہ بہت غذائیت بخش غذاؤں میں شمار کی جاتی ہے۔سائنس دانوں کا خیال ہے کہ اگر اس غذا کو زیادہ کھایا جائے تو یہ موسمی تبدیلی کے اثرات کو برداشت کرنے میں مدد دیتی ہے۔اگر آپ سمندری غذا کھانے لگیں گے تو اس خطہ زمین کو محفوظ کرلیں گے،کیوں کہ اس طرح سے سبزی خوری اور گوشت خوری کم ہو جائے گی۔
اگر آپ کو سوشی (SUSHI)نامی جاپانی ڈش،جونیم پختہ مچھلی کے قتلوں پرمشتمل ہوتی ہے ،پسند ہے تو اس کا مطلب یہ ہوا کہ آپ پہلے ہی کائی کی ایک مشہور قسم کھا چکے ہیں،جس کانام نوری(NORI) ہے۔یہ تقریباً سیاہ یایوں کہنا چاہیے کہ گہری سبزہوتی ہے۔

اس کو خشک کر لیا جاتا ہے اور دبا کر لمبے ٹکڑے کاٹ لیے جاتے ہیں۔پھر انھیں سوشی،یعنی مچھلی کے قتلوں پر لپیٹ کر کھایا جاتا Eat green seafood ہے ۔

یہ سوپ اور دوسری غذاؤں میں بھی استعمال ہوتی ہے۔اسے کھاتے وقت محتاط رہنے کی ضرورت ہے ،اس لیے کہ خشک ہونے پر کھانے سے پیاس بہت لگتی ہے اور پانی نہ پینے سے جسم میں پانی کی کمی واقع ہو سکتی ہے۔
جاپانی کھانوں میں یہ نمک کے طور پر بھی استعمال کی جاتی ہے۔اس کا ایک ٹکڑا جو تقریباً سوشی رول کے برابر ہوتاہے،اس میں 13حرارے(CALORIES)ہوتے ہیں ۔ممکن ہے جلد ہی سمندری کائی کا استعمال بڑے پیمانے پرہونے لگے،کیوں کہ یہ ہزاروں برس سے چین،جاپان اور کوریا میں کھائی جارہی ہے ۔اس کی دس ہزار سے زیادہ اقسام دستیاب ہیں۔
سبزیوں میں کیل(KALE)مفید غذاؤں میں شمار کی جاتی ہے۔ماہرین صحت نے اسے بہت غذائیت بخش قرار دیا ہے ۔یہ ایک قسم کی بندگوبھی ہوتی ہے ۔اس کے علاوہ اب سبز سمندری کائی بھی بازاروں میں آگئی ہے ۔اس میں لحمیہ(پروٹین)،ریشہ اور فولک ایسڈ ہوتا ہے ۔تمام قسم کی سمندری کائیوں میں معدنیات (منرلز)کی خاصی مقدار ہوتی ہے ،جن میں تانبا،آیوڈین ،فولاد اور کیلسےئم شامل ہے ۔اس کے علاوہ کیل میں حیاتین ”ک“(K) کی بھی مناسب مقدار ہوتی ہے ۔یہ حیاتین پالک اور سبزپتوں والی سبزیوں میں بھی پائی جاتی ہے ۔حیاتین ”ک“سے ہڈیوں کی مضبوطی قائم رہتی ہے اور یہ جسم میں ایسی خاصیت پیدا کر دیتی ہے کہ زخم جلد مندمل ہوجاتے ہیں ۔یہ تیرہ میں سے چار ایسی لحمیات کی پیدائش میں مدد دیتی ہے ،جو شریانوں میں خون کے تھکوں کو ختم کر تی ہیں۔
اس کے علاوہ اس میں”فیوکوائڈنس“(FUCOIDANS)نامی مادہ بھی ہوتا ہے ،جس سے عمر طویل ہوتی ہے ۔جاپانیوں کی طویل العمری کا یہی راز ہے ۔یہ آپ کی قوت مدافعت میں اضافہ کرتا،عارضہ دل کا سبب بننے والی بیماریوں کی روک تھام کرتا اور عمر Eat green seafood میں اضافہ کرتا ہے ۔
سمندری کائی کو اعتدال سے کھانا چاہیے،لیکن اگر آپ زیادہ مقدار میں کھائیں گے تو آیوڈین کی زیادہ مقدار بھی جسم میں پہنچ جائے گی،اس لیے کہ اس میں آیوڈین زیادہ ہوتی ہے ۔عام مچھلیوں کی طرح سے اس میں بھی ماحولیاتی آلودگی شامل ہوجاتی ہے ،مثلاً کیڈمےئم(CADMIUM)اور آرسینک(NIC ARSE)،جن سے آپ کے جگر اور لبلبے کو نقصان پہنچتا ہے ،لہٰذا بہتر ہو گا کہ آپ خود سمندرمیں جا کر اس کائی کو نکالنے اور کھانے کی کوشش نہ کیجیے،بلکہ کسی کمپنی کی تیار کردہ کائی کھائیے۔کمپنی کی کائی لیبارٹری ٹیسٹ کی جاتی ہے اور یہ مضر صحت نہیں ہوتی۔
سمندری کائی اور زمین
ہم کائی کو اپنی روزانہ کی غذاؤں میں شامل کرکے اپنے پیارے سیارے ،یعنی زمین کو کیسے محفوظ رکھ سکتے ہیں؟اس کائی کو سمندری حیوانات کھانا زیادہ پسند کرتے ہیں ،مگر ہم بھی اسے کھائیں تو کیا حرج ہے؟حال ہی میں کی گئی تحقیق سے ثابت ہوتا ہے کہ ہمیں کائی اعتدال کے ساتھ کھانی چاہیے۔اعداد وشمار سے پتا چلا ہے کہ دنیا کی آبادی 2050ء تک 7ارب 30کروڑ سے بڑھ کر 9ارب 80کروڑ تک پہنچ جائے گی۔اس وقت انسانوں کے لیے غذائی قلت پیدا ہو سکتی ہے ،کیوں کہ 24ارب ٹن زمین میں اب ایسی زراعتی صلاحیت نہیں رہی کہ وہ اتنا اجناس پیدا کر سکے۔جہاں تک سمندری حیات کا تعلق ہے تو ہم دنیا کے سمندروں سے تقریباً 90فیصد مچھلیوں کا ذخیرہ ختم کر چکے ہیں۔
آپ کائی کہاں سے حاصل کر سکتے ہیں؟
کوریا اور جاپان کے جتنے ریستوراں پاکستان میں ہیں،ان میں خشک سمندری کائی دستیاب ہے ۔سپر مارکیٹوں میں جہاں غیر ملکی مصنوعات مل جاتی ہیں ،وہاں اگر آپ خشک سمندری کائی یا نوری کائی طلب کریں گے تو وہ بھی مل جائیں گی۔آپ انھیں اسٹرابیری یا مختلف ذائقے دار چیزوں کے ساتھ ملا کر کھا سکتے ہیں۔

Source UrduPoint.

Show More

Mushahid Hussain

My Name is Mushahid Hussain Alvi I am a Web Designer

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

Check Also

Close
Back to top button
Close
%d bloggers like this: